Ghazal Baraf ahsasaat ki pighla sakay

Discussion in 'Urdu Ghazal' at Pakistan.web.pk started by sahrish khan, Feb 16, 2020.

  1. sahrish khan
    11

    sahrish khan Star Pakistani I Love Reading

    انتشار و خوف ہر اک سر میں ہے
    عافیت سے کون اپنے گھر میں ہے

    زندگی پر سب حقیقت کھل چکی
    تو ابھی تک خواب کے پیکر میں ہے

    مطمئن انساں کہیں پر بھی نہیں
    ایک سی حالت زمانے بھر میں ہے

    رات کی چٹان سے صبحیں تراش
    خواب کی تعبیر اسی پتھر میں ہے

    جھوٹ کی بن آئی ہے چاروں طرف
    سچ اگر ہے بھی تو پس منظر میں ہے

    برف احساسات کی پگھلا سکے
    وہ شرر ماضی کی خاکستر میں ہے

    ٹوٹ جانے تک اڑیں گے ہم نیازؔ
    حوصلہ اتنا تو بال و پر میں ہے

    عبد المتین نیا نیاز
     
    Veer, Maria-Noor and intelligent086 like this.
  2. sahrish khan
    11

    sahrish khan Star Pakistani I Love Reading

  3. intelligent086
    9

    intelligent086 Popular Pakistani

    واہ کیا کہنے
    بہت عمدہ
     
    sahrish khan likes this.
  4. sahrish khan
    11

    sahrish khan Star Pakistani I Love Reading

  5. sahrish khan
    11

    sahrish khan Star Pakistani I Love Reading

  6. Maria-Noor
    8

    Maria-Noor Popular Pakistani I Love Reading

  7. sahrish khan
    11

    sahrish khan Star Pakistani I Love Reading

  8. Veer
    26

    Veer Famous Pakistani Staff Member

  1. Angelaa
  2. Maria-Noor
  3. Maria-Noor
  4. Maria-Noor
  5. Maria-Noor
Loading...