Ghazal Lamas ki anch par jazbon na ubali chae

sahrish khan

sahrish khan

Star Pakistani
I Love Reading
6,878
13,957
736
لمس کی آنچ پہ جذبوں نے اُبالی چائے
عشق پیتا ہے کڑک چاہتوں والی چائے
کیتلی ہجر کی تھی، غم کی بنائی چائے
وصل کی پی نہ سکے ایک پیالی چائے
ہم نے مشروب سبھی مضر صحت ترک کئے
ایک چھوڑی نہ گئی ہم سے یہ سالی چائے
میرے دالان کا منظر کبھی آ کر دیکھو
درد میں ڈوبی ہوئی شام، سوالی چائے
میں یہی سوچ رہا تھا کہ اجازت چاہوں
اس نے پھر اپنے ملازم سے منگا لی چائے
اس سے ملتا ہے محبت کے ملنگوں کو سکوں
دل کے دربار پر چلتی ہے دھمالی چائے
رنجشیں بھول کے بیٹھیں کہیں مل کر دونوں
اپنے ہاتھوں سے پِلا خیرسگالی چائے
عشق بھی رنگ بدل لیتا ہے جانِ احمد
ٹھنڈی ہوجائے تو پڑ جاتی ہے کالی چائے
 

Create an account or login to comment

You must be a member in order to leave a comment

Create account

Create an account on our community. It's easy!

Log in

Already have an account? Log in here.

Similar threads

Maria-Noor
Replies
7
Views
65
Maria-Noor
Maria-Noor
Maria-Noor
    • Like
  • Maria-Noor
  • 15
  • 216
2
Replies
15
Views
216
Maria-Noor
Maria-Noor
sahrish khan
    • Like
  • sahrish khan
  • 9
  • 128
Replies
9
Views
128
sahrish khan
sahrish khan
sahrish khan
    • Like
  • sahrish khan
  • 6
  • 70
Replies
6
Views
70
Maria-Noor
Maria-Noor
sahrish khan
    • Like
  • sahrish khan
  • 5
  • 103
Replies
5
Views
103
sahrish khan
sahrish khan
Top