Qudarti Nazaray zehni sehat. !!

Discussion in 'Fitness & Health' at Pakistan.web.pk started by Falak, Jul 22, 2019.

  1. Falak
    13

    Falak Star Pakistani I Love Reading



    23427_39072426.




    ڈاکٹر ملینی گرین برگ

    چند روز قبل میں ایک پہاڑی پر چڑھی اور پھر نیچے اجلی، صاف اور نیلگوں جھیل کی طرف نظریں کیں۔ مجھے پرندے اور تتلیاں نظر آئیں۔ میں نے اوپر صاف آسمان کو دیکھا۔ سرخ پھول کی خوبصورتی کو اپنے اندر محسوس کیا اور صنوبر کے ایک اونچے درخت کے سایے میں پناہ لی۔ اردگرد پھیلے قدرتی حسن کے بیچ جب توجہ ایک نکتہ پر مرکوز کرتے ہوئے میں نے گہری سانسیں لیں تو ان لمحوں میں یوں لگا جیسے میری زندگی کا سارا دباؤ اور الم پگھل سا گیا ہے۔ میرے اندر تشکر، ربط، درد مندی اور احترام کے عمیق احساسات نے جنم لیا۔ شہری اور جدیدطرزِ زندگی کے اثرات: ہماری زندگی ایسے عہد میں بسر ہو رہی ہے جس میں قدرت کے ساتھ ربط کے مواقع کم ہیں۔ چند ہی برس قبل اقوام متحدہ کے جائزے میں بتایا گیا کہ 80 فیصد امریکی اور دنیا بھر میں رہنے والے لوگوں کا نصف شہری علاقوں میں رہتا ہے۔ جائزے کے مطابق امریکی اپنا 90 فیصد وقت عمارتوں کے اندر یا گاڑیوں میں گزارتے ہیں۔ بچے، نوعمر اور بالغ کئی گھنٹے ٹی وی دیکھنے اور انٹرنیٹ استعمال کرنے یا گیمز پر صَرف کرتے ہیں۔ ہم کم ہی کیمپنگ کرنے یا مچھلی پکڑنے کے لیے نکلتے ہیں۔ بچے بیشتر وقت گھروں میں گزارنے کے عادی ہو گئے ہیں۔ بڑے شہروں میں ٹریفک، گنجان آبادی، فضائی آلودگی، رہائشی اخراجات میں اضافہ یا شور کی صورت میں دباؤ بڑھ گیا ہے۔ سبزہ دباؤ میں کمی لا سکتا ہے: جہاں ایک طرف شہری ماحول ذہنی دباؤ پیدا کرتا ہے وہیں قدرتی ماحول یا سرسبز علاقے میں وقت گزارنے سے اس میں کمی واقع ہوتی ہے۔ تحقیقی شواہد بتاتے ہیں کہ شہروں کے اندر باغات اور پارکوں کی شکل میں پائے جائے والے سرسبز مقامات یا ایسے علاقے جہاں گھاس اور درختوں کی صورت میں سبزہ ہوتا ہے، ہمارے ذہنی دباؤ کو کم کرتے ہیں اور ہمیں مسرت اور صحت مند عطا کرتے ہیں۔ دراصل سبزہ دباؤ سے پیدا ہونے والی عام بیماریوں اور مسائل مثلاً امراضِ قلب، ذیابیطس، دیرینہ درد اور موٹاپا میں کمی کا موجب ہے۔ قدرتی ماحول یا شہری علاقوں کے سرسبز مقامات میں زیادہ وقت بتانے والوں کو نیند بہتر آتی ہے، وہ جسمانی طور پر زیادہ متحرک ہوتے ہیں اور انہیں تشویش، یاسیت، کم فشارِ خون جیسے مسائل کم درپیش ہوتے ہیں۔ نیز زندگی زیادہ مطمئن گزرتی ہے۔ بطور ماہرِ نفسیات ہم طویل المدت صحت اور مسرت کا احوال جاننے کے لیے عموماً ذاتی عوامل جیسا کہ شخصیت یا غذا پر توجہ مرکوز کرتے ہیں۔ تاہم تحقیقات کے ذریعے یہ شواہد زور شور سے سامنے آ رہے ہیں ہم جس جسمانی اور سماجی ماحول میں رہتے ہیں، ہماری زندگی کے معیار طے کرنے میں غالباً وہ سب سے اہم ہے۔ سرسبز مقامات کا تعلق طویل العمری سے بھی ہے۔ جو ان سے زیادہ مستفید ہوتے ہیں زیادہ جیتے ہیں۔ قدرتی نظارے کیسے ہوں؟ رواں ماہ امریکی ماہنامے ’’سائنٹیفک‘‘ میں شائع ہونے والی ایک تحقیق میں اس امر کا جائزہ لیا گیا ہے کہ فطرت کی کتنی مقدار جسمانی اور ذہنی صحت کے لیے ضروری ہے۔ محققین نے 20 ہزار سے زائد افراد سے گزشتہ ہفتے کی سرگرمی کے بارے میں پوچھا۔ معلوم یہ ہوا کہ ہفتے میں دو گھنٹے پارک، درختوں یا ساحل سمندر پر گزارنے سے صحت اور مسرت حاصل ہوتی ہے۔ اس سے فرق نہیں پڑتا کہ ایسا ایک ہی بار کیا جائے یا مختلف دنوں میں وقفے وقفے سے۔ فطرت سے صحت مندوں کے ساتھ ساتھ دیرینہ امراض میں مبتلا اور معذور بھی مستفید ہوسکتے ہیں۔ ایسا کیوں ہے؟حال ہی میں محققین نے یہ سمجھنے کی کوشش کی ہے کہ سرسبز علاقے یا قدرتی ماحول میں جانا طویل مدتی صحت کے لیے کیوں مفید ہے۔ انہوں نے بہت سے عوامل کا مطالعہ کیا جن سے اس تعلق کو سمجھا جا سکتا ہے۔ ان میں شامل ہیں؛ زیادہ جسمانی سرگرمی (کھلے ماحول میں ہم زیادہ متحرک ہوتے ہیں)۔ گرمی میں کمی (کھلے ماحول میں درجہ حرارت کم ہوتا ہے)۔ کم آلودگی۔ ذہنی صحت کو پہنچنے والا فائدہ (یاسیت ہماری صحت پر برے اثرات ڈالتی ہے)۔ معاشرے اور کمیونٹی سے زیادہ ربط (دوسروں سے تعامل اور معاشرے سے منسلک ہونے کا احساس ہوتا ہے)۔ جسمانی اور نفسیاتی دباؤ میں کمی۔ قوتِ مدافعت میں اضافہ ۔ فطری ماحول میں چہل قدمی عیاشی نہیں بلکہ صحت مندانہ طرزِ زندگی کا اہم حصہ ہے، ویسے ہی جیسے اچھی غذا لی اور باقاعدہ ورزش کی جاتی ہے۔ اگر آپ گنجان آباد شہری علاقے میں رہتے ہیں اور آپ کے پاس فطری ماحول میں جانے کے مواقع کم ہیں تو قدرتی مناظر کی تصاویر یا وڈیوز ہی دیکھ لیں۔ آپ اپنے پسندیدہ قدرتی مقامات کو تصور میں لاکر بھی مستفید ہو سکتے ہیں مثلاً آپ پسندیدہ ساحلِ سمندر پر یا جنگل میں چہل قدمی کو ذہن میں لا سکتے ہیں۔ اس تصور کو زیادہ واضح اور دل آویز بنانے کے

    لیے اپنے حواس پر توجہ دیں۔ تحقیقات سے ظاہر ہوتا ہے اس طرح بھی ذہنی دباؤ میں کمی ہوتی ہے۔


    @Recently Active Users
     
    Tags:
    Ellaf khan and Hunain Naeem like this.
  2. Ellaf khan
    6

    Ellaf khan Popular Pakistani I Love Reading

    @Falak
    Interesting Thank You Sharing this.
     
Loading...